ازدواجی تعلق سے انکار . 80سالہ بابے نے اپنی 61سالہ بیوی کو قتل کردیا

روم: اٹلی میں ازدواجی تعلق سے انکار کرنے پر 80سالہ بابے نے اپنی 61سالہ بیوی کو موت کے گھاٹ اتار ڈالا۔ ڈیلی سٹار کے مطابق کرسمس کے موقع پر ویتو کینگنی نامی ملزم کی اہلیہ نتالیا کائرشوک نے ازدواجی تعلق قائم کرنے پر پہلے رضامندی ظاہر کی اور جب ملزم نے اپنی زائدالعمری کے پیش نظر جنسی تقویت کی گولی کھا لی تب نتالیا نے ازدواجی تعلق سے انکار کر دیا۔

رپورٹ کے مطابق اس موقع پر نتالیا کی طرف سے انکار کیے جانے پر ویتو شدید مشتعل ہو گیا اور چھری سے اس پر حملہ کر دیا۔ ملزم نے مقتولہ کے جسم میں کئی بار چھری گھونپی ، جس سے اس کی موقع پر ہی موت واقع ہو گئی۔ پولیس کے مطابق یہ واردات 25اور 26دسمبر کی درمیانی رات ہوئی۔ ملزم بیوی کو قتل کرنے کے بعد اس کی لاش فرش پر چھوڑ کر خود بستر میں جا کر سو گیا۔ اگلی صبح اس نے ناشتہ کیا، اپنے کتے کے ساتھ چہل قدمی کی۔

ملزم معمول کے کام اس طرح کرتا رہا جیسے کچھ ہوا ہی نہیں۔ سہ پہر کے وقت وہ ایک بار پھر اپنے کتے کے ساتھ ٹہلنے گیا اور واپسی پر اپنے ایک ہمسائے کو اس واردات کے متعلق بتایا اور کہا کہ وہ پولیس کو کال کر دے۔ پولیس کے مطابق ملزم کو گرفتار کر لیا گیا ہے اور اس سے تفتیش کی جا رہی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں