فیصل آباد میں کم سن بچوں کو بھکاریوں کو فروخت کرنے کا انکشاف

فیصل آباد : فیصل آباد میں کم سن بچوں کو بھکاریوں کو فروخت کرنے کا انکشاف ہوا ، فیصل آباد کے رہائشی نے اپنی ایک ماہ کی بچی کو 25 ہزار روپے کے عوض پیشہ ور بھکاریوں کو فروخت کر دیا۔ تفصیلات کے مطابق فیصل آباد کے ایک علاقہ کے رہائشی ملزم ندیم نے ڈیڑھ سال قبل اپنی ایک ماہ کی بیٹی کو پیشہ ور بھکاریوں کو فروخت کر دیا تھا ۔

پیشہ ور بھکاری سروری نے 25 ہزار روپے میں بچی کو خریدا تھا۔ ڈیڑھ سال بعد معاملہ کُھلنے پر پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے بچی کے والد اور بھکاری سروری کو حراست میں لے لیا۔ جبکہ بچی کو چائلڈ پروٹیکشن بیورو کے سپرد کر دیا گیا ہے۔ پولیس نے بتایا کہ بچی کو پیشہ ور بھکاریوں کو فروخت کرنے کا مقدمہ تھانہ غلام محمد میں درج کر لیا گیا ہے۔

مقدمہ چائلڈ پروٹیکشن بیورو کی مدعیت میں درج کیا گیا جس میں سات دفعات لگائی گئی ہیں۔ میڈیا رپورٹ میں بتایا گیا کہ پولیس کو اطلاع دی گئی تھی کہ ایک ماہ کی بچی کو فروخت کیا گیا ہے ، ڈیڑھ سال بعد پولیس نے کارروائی کی اور بچی کے والد اور پیشہ ور بھکاری کو گرفتار کر لیا جبکہ بچی کو بھی بازیاب کروا لیا۔ چائلڈ پروٹیکشن بیورو کی جانب سے جاری بیان میں بتایا گیا کہ جب بچی کو فروخت کیا گیا تب اُس کی عمر ایک ماہ تھی، بھکارن سروری بی بی بچی کو اپنے ساتھ رکھتی تھی اور یہی ظاہر کرتی تھی کہ یہ بچی اس کی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں