شہدادپور : کسان پانی کی قلت کے خلاف سڑکوں پر نکل آئے

شہدادپور (رپورٹ عباس رضامحمدانی نمائندہ نوائے جنگ برطانیہ/لاہور)شہدادپور کے قریب راجپر ماٸینر کے کسان پانی کی قلت کے خلاف سڑکوں پر نکل آئے ۔محکمہ آب پاشی کے راشی أفسران کے خلاف سابق ایم پی اے ماھی خان وسان ۔عبدالقادر راجپر ۔زمیندارا یار محمد لغاری ۔نیاز حسین سریوال۔قادر بخش لغاری ودیگر کی قیادت میں گاوں شیر خان لغاری سے موٹرساٸیکلوں پر سوار ہوکر پریس کلب تک احتجاجی ریلی نکالی گٸی ۔اور پریس کلب کے سامنے احتجاجی دھرنا دیا جس سے دونوں اطراف چلنے والی ٹریفک معطل ہوگٸی ۔دھرنے سے خطاب کرتے ہوٸے مقررین نے کہا کہ آب پاشی عملے کی نااہلی کی وجہ سے ہمارے واٹر کورسوں میں پانی کی شدید قلت ہے ۔

جس سے ہماری تیار فصلیں سوکھ کر تباہ ہورہی ہے ۔بار بار آب پاشی عملہ کی توجہ مبذول کرواٸی مگر کوٸی سنواٸی نہ ہوٸی مجبوری میں احتجاج کا راستہ اپنایا ۔انھوں نے بالا حکام سے پرزور مطالبہ کیا ہے کہ ہماری نہروں اور واٹرکورسوں میں پانی فراہم کیا جاٸے انھوں نے کہا کہ أب پاشی ایس ڈی او اجے کمار۔درواغہ واحد بخش رند۔اور بیل دار علی شیر خاصخیلی پانی دینے کیلٸے بھاری رشوت طلب کر رہے ہیں ۔انھوں نے کہا کہ پانی کی قلت ختم نہ کی تو احتجاج کا داٸرہ وسیع کر دیا جاٸے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں