کھائی میں گئے تو خاتون کے منہ سے ’بھائی‘ کے الفاظ نکلے

لاہور : 15 پر کال کے بعد موقع پر پہنچنے والے ڈولفن اہکار نے موٹروے زیادتی کیس سے متعلق ہولناک انکشاف کر دئیے ۔ 15 پر کال کے بعد موقع پر پہچنے والے ڈولفن اہلکار نے نجی ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ 15 پر 2 بج کر 49 منٹ پر کال موصول ہوئی تھی۔موقع پر پہنچے تو گاڑی کا شیشہ ٹوٹا ہوا تھا اور اس میں کوئی نہیں تھا۔

ٹارچ لائٹ جلائی تو بچے کا جوتا نظر آیا۔کھائی میں اترے تو دوسرا جوتا نظر آیا۔اندھیرا بہت تھا کچھ دکھائی نہیں دے رہا تھا۔‘کوئی ہے‘ کی آواز دے کر 6 فائر کیے۔نیچے اترے تو خاتون کے منہ سے ’بھائی‘ کے الفاظ نکلے۔ڈولفن اہلکار نے مزید کہا کہ جب پاس گئے تو خاتون نے بچوں کو حصار میں لیا ہوا تھا۔خاتون کو دیکھ کر رونگٹے کھڑے ہو گئے،وہ بہت زیادہ پریشان تھی اور حالت انتہائی خراب تھی۔

ضرور پڑھیں   نیشنل ایکشن پلان مسلم لیگ (ن) کی کاوشوں کا نتیجہ ہے، شہبازشریف

یاد رہے کہ گزشتہ رات لاہور کے علاقے گجرپورہ میں خاتون سے دوران ڈکیتی مبینہ اجتماعی زیادتی کا واقعہ پیش آیا ، جہاں ملزمان نقدی اور زیورات لوٹنے کے بعد خاتون کو اس کے بچوں کے سامنے زیادتی کا نشانہ بناکر فرار ہوگئے ، پولیس کی طرف سے معاملے پر تفتیش جاری ہے، سی آئی اے اور انوسٹی گیشن پولیس تاحال ملزمان کا سراغ نہ لگا سکی ، پولیس نے ریکارڈ یافتہ افراد کو بھی شامل تفتیش کرکے جلد اصل ملزمان کی گرفتاری کی امید ظاہر کی گئی ہے۔