آدمی اپنی بیوی کو فحش فلمیں دکھا کر اس کے ساتھ کیا حرکتیں کرتا رہا؟ جان کر روح کانپ اٹھے

ممبئی : بھارتی ریاست مہاراشٹر کے دارالحکومت ممبئی میں ایک مسلمان خاتون نے اپنے شوہر کے خلاف پولیس سے رجوع کیا ہے۔

خاتون نے الزام لگایا ہے کہ اس کے خاوند کی پہلے بھی 2 شادیاں اور طلاق ہوچکی ہیں جس کے بعد اس نے مجھ سے 2018 میں تیسری شادی کی تھی ۔ خاتون کے مطابق اس کا شہر فحش فلموں کا رسیا تھا اور اسے بھی ایسے کلپس دیکھنے پر مجبور کرتا تھا۔

خاتون نے بتایا کہ اس کا شوہر فحش فلم دکھانے کے بعد اسے پینے کیلئے جوس دیتا جسے پی کر وہ بے سدھ ہوجاتی ، اس کے بعد 46 سالہ شوہر غیر فطری جنسی تعلقات قائم کرتا۔ ایک بار تو شوہر نے بیوی کے نازک حصے میں لوہے کا راڈ ڈال دیا تھا جس کی وجہ سے بہت زیادہ خون بہنا شروع ہوگیا اور خاتون کو علاج کیلئے ہسپتال میں داخل کرانا پڑ گیا۔

ضرور پڑھیں   سعودی عرب نے واضح اعلان کر دیا ، پاکستانیوں کی جان میں جان آ گئی

خاتون نے پولیس کو درج کرائی گئی شکایت میں یہ بھی الزام لگایا ہے کہ اس کے شوہر نے اسے تین طلاق دے دی ہے جو قانوناً جرم ہے۔ خاتون کی درخواست پر پولیس نے کارروائی شروع کردی ہے۔

خیال رہے کہ بھارت میں طلاق ثلاثہ پر پابندی ہے اور ایسا کرنے والے کو تین سال تک قید کی سزا کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے۔