کرنٹ لگا کر جن نکالنے والے جعلی پیر کے پولیس نے اپنے “جن” نکال دیے

پشاور : لوگوں کو کرنٹ لگا کر جن نکالنے والے جعلی پیر کے پولیس نے اپنے “جن نکال دیے۔

سوشل میڈٰیا پر کچھ روز پہلے ایک ویڈیو وائرل ہوئی تھی جس میں ایک جعلی پیر بچوں کو کرنٹ لگا کر ان کے جن نکال رہا تھا۔ ویڈیو میں دیکھا گیا کہ جعلی پیر ایک ٹیزر کے ذریعے انتہائی ظالمانہ طریقے سے متاثرہ شخص کو بار بار کرنٹ لگا رہا تھا اور اس کی چیخ و پکار کے باوجود کوئی رحم نہیں دکھا رہا تھا۔ اس کے علاوہ کرنٹ لگانے کے بعد جعلی پیر نے نوجوان کو تھپڑ بھی مارے۔

پشاور (ڈیلی پاکستان آن لائن) لوگوں کو کرنٹ لگا کر جن نکالنے والے جعلی پیر کے پولیس نے اپنے “جن نکال دیے۔

سوشل میڈٰیا پر کچھ روز پہلے ایک ویڈیو وائرل ہوئی تھی جس میں ایک جعلی پیر بچوں کو کرنٹ لگا کر ان کے جن نکال رہا تھا۔ ویڈیو میں دیکھا گیا کہ جعلی پیر ایک ٹیزر کے ذریعے انتہائی ظالمانہ طریقے سے متاثرہ شخص کو بار بار کرنٹ لگا رہا تھا اور اس کی چیخ و پکار کے باوجود کوئی رحم نہیں دکھا رہا تھا۔ اس کے علاوہ کرنٹ لگانے کے بعد جعلی پیر نے نوجوان کو تھپڑ بھی مارے۔

نوٹ : گرافک ویڈیو، بعض صارفین کیلئے ویڈیو میں دکھائے گئے مناظر تکلیف کا باعث ہوسکتے ہیں

واقعے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی تو پشاور پولیس بھی حرکت میں آگئی اور جعلی پیر کے ” جن” نکالنے کا فیصلہ کیا۔ پولیس نے ویڈیو کے ذریعے شناخت کے بعد کارروائی کرتے ہوئے جعلی پیر کو اچینی بالا کے مقام سے گرفتار کرلیا۔پولیس کے مطابق جعلی پیر محمد اللہ ولد قدرت اللہ کے خلاف مقدمہ درج کرکے مزید تفتیش شروع کردی گئی ہے۔