پنجاب میں ڈینگی پھیلنے کا خطرہ منڈلانے لگا

لاہور : پنجاب میں ڈینگی پھیلنے کا خطرہ منڈلانے لگا۔ تفصیلات کے مطابق ڈینگی ایکسپرٹ ایڈوائزری گروپ نے محکمہ صحت کی کارکردگی کا پول پول کھول دیا ہے۔ اس حوالے سے ترجمان ڈینگی ایکسپرٹ ایڈوائزری گروپ کی جانب سے کہا گیا ہے کہ لاہور، راولپنڈی، اسلام آباد، فیصل آباد اور ملتان ڈینگی کے ہاٹ سپاٹس بن رہے ہیں،ممکنہ ہاٹ سپاٹس والے شہروں میں محکمہ صحت نے ڈاکٹرز کی ٹریننگ نہیں کی۔

ترجمان کی جانب سے مزید کہا گیا ہے کہ صوبے کے مختلف شہروں سے بڑی تعداد میں ڈینگی لاروا ملا، بڑی تعداد میں ڈینگی لاروا ملا مگر صوبے میں ڈینگی کے کیسز اتنے کم کیسے ہیں؟ صوبے میں ڈینگی کیسز رپورٹ ہورہے مگر اصل تعداد رپورٹ نہیں کی جارہی۔ ترجمان ڈیاگ نے مزید کہا کہ ہوا میں نمی اور بارشوں سے ڈینگی لاروا کی تعداد میں اضافہ ہورہا ہے،پنجاب ہیلتھ کئیر کمیشن نے نجی اسپتالوں میں عملے کی ٹریننگ پر کوئی کام نہیں کیا۔

خیال رہے کہ اس وقت دنیا بھر کی طرح پاکستان میں بھی کورونا وائرس نے اپنے قدم جمائے ہوئے ہیں جس کی وجہ سے ملک کا نظام درہم برہم ہوگیا تھا۔ تاہم پاکستان میں اب کورونا کی صورتحال میں بہتری آنا شروع ہو گئی ہے۔ ملک بھر میں کورونا کو شکست دینے والوں کی تعداد بڑھنے لگی۔ پاکستان میں ہر گزرتے دن کے ساتھ کورونا کی صورتحال میں بہتری آتی جا رہی ہے جس کے بعد نئے کیسز کی تعداد میں بھی کمی آ رہی ہے جبکہ صحت مند ہونے والے افراد کی تعداد میں بھی اضافہ ہوتا جا رہا ہے۔

اس حوالے سے بتایا گیا ہے کہ پاکستان میں صحت یاب ہونے والے افراد کی تعداد 2 لاکھ 58 ہزار سے تجاوز کر گئی جبکہ ملک بھر میں ایکٹو کیسز کی تعداد 18 ہزار 494 رہ گئی ہے۔ نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سنٹر نے ملک میں کورونا سے متعلق نئے اعدادوشمار جاری کر دیے جس کے مطابق ملک میں کورونا وائرس کے وار جاری ہیں اور گذشتہ 24 گھنٹوں میں 782 نئے کیسز رپورٹ ہوئے جس کے بعد ملک بھر میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد 2 لاکھ 82 ہزار 645 تک جا پہنچی جبکہ ملک میں ایکٹیو کیسز کی تعداد 18 ہزار 494 ہو گئی ہے۔