لاہور میں لڑکی کو برہنہ کرنے والے 3 ملزمان کو گرفتار کر لیا گیا

لاہور : لاہور میں لڑکی کو برہنہ کرنے والے 3 ملزمان کو گرفتار کر لیا گیا ۔تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز لاہور میں ایک نوجوان نے ساتھیوں کے ساتھ مل کر لڑکی کو شدید تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔متاثرہ لڑکی کی درخواست پر پولیس نے مقدمہ درج کرلیا ۔ لاہور کے علاقے غالب مارکیٹ میں یہ واقعہ پیش آیا۔جہاں نوجوان لڑکی کے شادی کرنے سے انکار پر آپے سے باہر ہوگیا۔

نوجوان نے لڑکی پر بہیمانہ تشدد کیا اور اس کے کپڑے پھاڑ کر برہنہ حالت میں گلی میں گھمایا۔متاثرہ لڑکی کو کہنا تھا کہ وسیم نامی نوجوان مجھ سے زبردستی شادی کرنا چاہتا تھا۔انکار کرنے پر تشدد کیا۔پولیس نے کاروائی کرتے ہوئے تمام ملزمان کو گرفتار کر لیا ہے جب کہ واقعے کی مزید تحقیقات بھی کی جا رہی ہے۔

سی طرح گذشتہ روز فیصل آباد میں نوجوان نے شادی شدہ خاتون کو قتل کر دیا۔

بتایا گیا کہ فیصل آباد میں ایک افسوسناک واقعہ پیش آیا ہے جہاں شادی شدہ خاتون کو قتل کر دیا گیا۔بتایا گیا کہ خاتون کو قتل کرنے والے نوجوان نے خود کو بھی گولی مار کرخود کشی کرلی۔ملزممقبولہ کو پسند کرتا تھا اور طلاق دلوا کر شادی کا خواہشمند تھا۔ پولیس نے دونوں کی لاشیں قبضہ میں لے کر اسپتال منتقل کر دی ہیں۔ذرائع کے مطابق یہ واقعہ جڑانوالہ کے علاقے میں پیش آیا جہاں نوید نامی ایک نوجوان مقبولہ نامی شدہ خاتون کو پسند کرتا تھا اور اس سے شادی کابھی خواہش مند تھا۔

تاہم خاتون نے پہلے خاوند سے طلاق لے کر اس سے شادی کرنے سے انکار کردیا جس پر نوجوان نے طیش میں آتے ہوئے انتہائی قدم اٹھایا اور خاتون کو فائرنگ کر کے قتل کر دیا۔خاتون کو قتل کرنے کے بعد نوجوان نے خود کو بھی مار دیا۔اطلاع ملنے پر پولیس موقع پر پہنچ گئی اور دونوں کی لاشیں تحصیل ہیڈ کوارٹر اسپتال جڑانوالہ منتقل کر دیں۔