قطری پورٹ کو کراچی پورٹ سے فیری کے ساتھ منسلک کیا جارہا ہے، وزیراعظم

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ قطری پورٹ کو کراچی پورٹ سے فیری کے ساتھ منسلک کیا جارہا ہے، بندرگاہوں کے رابطوں سے پاکستان کی قطر کو برآمدات میں 73 فیصد اضافہ ہوگا۔

وزیراعظم عمران خان سے قطر آرمڈ فورسز کے چیف آف aسٹاف لیفٹیننٹ جنرل غنیم بن شاہین نے وزیر اعظم ہاؤس میں ملاقات کی۔ ملاقات میں وزیر دفاع پرویز خٹک اور سیکریٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ بھی شریک تھیں۔ ملاقات میں دو طرفہ فوجی تعاون بڑھانے سے متعلق معاملات، خطہ میں امن و امان کے استحکام پر تبادلہ خیال اور پاک قطر باہمی مفادات پر مبنی تعلقات پر اطمینان کا اظہار کیا گیا۔

اس موقع پر وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ مسلم ممالک کو درپیش چیلنجز کا سامنا کرنے کے لیے یکجہتی کی ضرورت ہے۔ عمران خان نے کہا کہ قطرکی جانب سے ایک لاکھ پاکستانیوں کو روزگار کے مواقع فراہم کرنے اور مزدور و محنت کشوں کے لیے کراچی اور اسلام آباد میں دفاتر کھولنے پر قطر کے شکرگزار ہیں۔
وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ قطری پورٹ کو کراچی پورٹ سے فیری کے ساتھ منسلک کیا جارہا ہے، بندرگاہوں کے رابطوں سے پاکستان کی قطرکو برآمدات میں 73 فیصد اضافہ ہوگا، امید ہے دونوں ممالک کے درمیان مثبت سفارتی اور تجارتی تعلقات قائم اور ان میں مزید اضافہ ہوگا۔

قطری چیف آف اسٹاف کا کہنا تھا کہ قطر اور پاکستان کے درمیان دو طرفہ تجارت کو فروغ مل رہا ہے، قطر میں پاکستان کی برآمدات 73 فیصد اضافہ ہوا ہے اور آنے والے برسوں میں دونوں ممالک کے درمیان تجارت کو مزید وسعت ملے گی اور دونوں ممالک کے درمیان ترقی اور خوشحالی کے لیے قطری حکومت بھرپور تعاون کرے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں