چین نے لداخ پر قبضے کے بعد ڈیم کی تعمیر شروع کر دی

لداخ : چین نے لداخ پر قبضے کے بعد ڈیم کی تعمیر شروع کر دی ہے۔تفصیلات کے مطابق چین اور بھارت کے مابین لداخ میں کشیدگی جاری ہے۔چین نے نہ صرف بھارتی علاقے پر قبضہ کیا بلکہ کئی کلومیٹر تک بھارت کے اندر گھس گیا۔جب بھارتی فوجیوں نے چین سے رات کے اندھیرے میں اپنا علاقہ چھڑانے کی کوشش کی تو چین نے پہلی بار وارننگ دی اور دوسری پر حملہ کردیا جس کے نتیجے میں بھارت کے 20 فوجی موت کے منہ میں چلے گئے۔

اب بھارتی میڈیا نے دعویٰ کیا ہے کہ چین نے لداخ میں گلوان ندی پر ڈیم بنانا شروع کر دیا ہے۔بھارت نے 16 جون کو سیٹلائٹ سے تصاویر حاصل کی ہیں جن میں دیکھا جاسکتا ہے کہ چین نے گلوان ندی میں پانی روکا ہے اور کچھ تعمیراتی کام جاری ہے۔بھارتی میڈیا کا کہنا ہے کہ یہ ایک حقیقت ہے کہ چین گلوان میں ایک سڑک بنا رہا ہے اور ڈیم کی تیاری کر رہا ہے۔
جس نے چین کی وادی گلوان کے جغرافیہ کو تبدیل کرنے کے مذموم منصوبوں کو بے نقاب کیا ہے۔

ضرور پڑھیں   امریکا کا 60 روسی سفارت کاروں کو ملک چھوڑنے کا حکم

سیٹلائٹ سے لی گئی تصاویر میں گاڑیوں کی بھی بھاری نفری دیکھی گئی ہے۔تصاویر میں چینیوں کی حرکات کو بھی دکھایا گیا جو وادی گلوان میں ندی کے بہاؤ کو روکنے کی کوشش کر رہے ہیں۔دوسری جانب چین نے پہلی مرتبہ وادی گلوان کا دعویدار ہونے کا اعلان کر دیا ہے۔ ترجمان چینی وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ وادی گلوان چین کی طرف واقع ہے،

اپریل سے بھارت نے یہاں اپنی مرضی سے سڑکیں اور پل بنانا شروع کر دیئے تھے، احتجاج بھی جمع کروایا لیکن ایل او سی پر بھارت کی اشتعام انگیزی مزید بڑھ گئی تھی، ان کی جانب سے مزید بتایا گیا ہے کہ افواج چین اس علاقے میں بہت عرصے سے ڈیوٹی دے رہی ہے، بھارت کی جانب سے ہمیشہ اشتعال انگیزی ہی پھیلائی گئی ہے

اپنا تبصرہ بھیجیں