ایک ارب روپے اپنے دفتر پر لگانے کے بعد کنگنا رناوت نے بڑا اعلان کردیا

ممبئی : چند روز قبل بالی ووڈ اداکارہ کنگنا رناوت نے ایک بنگلے میں اپنا شاندار آفس کھولا جس پر ایک ارب روپے سے زائد لاگت آئی۔ وہ ممبئی کے پوش علاقے باندرہ میں واقع پروڈکشن ہاﺅس منی کرنیکا فلمز کی مالک بھی ہیں اور اسی علاقے میں تین منزلہ بنگلے میں رہتی ہیں۔ اب انہوں نے ایک اور بڑا اعلان کر دیا ہے۔

انڈیا ٹائمز کے مطابق کنگنا رناوت نے کہا ہے کہ”میں چاہتی ہوں کہ جب اپنی عمر کی 50کی دہائی میں پہنچوں تو میرا شمار بھارت کے امیر ترین لوگوں میں ہو۔“حالیہ انٹرویو میں کنگنا رناوت کا کہنا تھا کہ ”میں بالی ووڈ میں آﺅٹ سائیڈر کہلاتی ہوں۔ لوگ میرے بارے میں کہتے ہیں کہ میں ایک چھوٹے شہر سے آنے والی دولت کی لالچی لڑکی ہوں

ضرور پڑھیں   شاہد آفریدی اور سلمان خان کی ملاقات کی تصاویر وائرل

۔ جو نہیں جانتے میں انہیں بتانا چاہتی ہوں کہ جس روز میں گھر سے بھاگ کر آئی تھی اس وقت میری جیب میں صرف1500روپے تھے۔ عورت ہونے کے ناتے میں نے کبھی رقم کے بارے میں نہیں سوچا، لیکن جب مجھے چھوٹے شہر سے آنے والی دولت کی لالچی لڑکی کا طعنہ دیا گیا تو اس طعنے نے میری زندگی ہی بدل دی ۔ پہلے میری نظر میں مادی چیزوں کی کوئی اہمیت نہیں تھی لیکن اب میں بھارت کے امیر ترین لوگوں میں شامل ہونا چاہتی ہوں۔“

اپنا تبصرہ بھیجیں