ارکان پنجاب اسمبلی نے ایک ماہ کی تنخواہ کرونا ایمرجنسی فنڈ میں دینے کا اعلان کر دیا

Spread the love

لاہور : سپیکر پنجاب اسمبلی پنجاب چودھری پرویزالٰہی نے وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار سے ملاقات کی ہے۔ ملاقات میں موجودہ سیاسی صورتحال خصوصاً پنجاب میں کورونا وائرس سے بچائو کیلئے کیے جانے والے اقدامات کے حوالے سے مشاورت کی گئی اور سپیکر پنجاب اسمبلی چودھری پرویزالٰہی کے کہنے پر ’’حکومت پنجاب کورونا ایمرجنسی فنڈ‘‘ کے قیام کا فیصلہ کیا گیا۔

سپیکر، ڈپٹی سپیکر سمیت تمام ارکان اسمبلی، اسمبلی سیکرٹریٹ کے گریڈ 16 سے 22 کے افسر اپنی ایک ایک ماہ کی تنخواہ اس فنڈ میں جمع کروائیں گے۔ اس سلسلے میں سپیکر نے تحریک انصاف، ن لیگ، پیپلزپارٹی، پاکستان مسلم لیگ، راہ حق پاکستان اور آزاد امیدواروں کے پارلیمانی لیڈروں اور پارلیمانی کمیٹیوں کے سربراہوں سے رابطہ کر کے تنخواہ جمع کروانے کے حوالے سے مشاورت کی۔

ضرور پڑھیں   “میں رائیونڈ رشتہ لینے تو نہیں جارہا ” عمران خان کاطاہرالقادری بارے سوال کرنے پرصحافی کوایساجواب کہ سب کی ہنسی چھوٹ گئی

تمام پارٹیوں نے سپیکر چودھری پرویزالٰہی کے اس فیصلے کو بھرپور طور پر سراہتے ہوئے اس کی حمایت کی اور اپنی ایک ایک ماہ کی تنخواہ جمع کروانے پر رضا مندی کا اظہار کیا۔ سپیکر نے ن لیگ کے ملک ندیم کامران، چودھری اقبال گجر، رانا محمد اقبال، خواجہ سلمان رفیق، سمیع اللہ خان، عطاء تارڑ، پیپلزپارٹی کے سید حسن مرتضیٰ، راہ حق پاکستان کے محمد معاویہ و دیگر سے مشاورت کی۔

چودھری پرویزالٰہی نے کہا کہ موجودہ صورتحال میں پنجاب کو اس موذی وبا سے بڑا خطرہ ہے لیکن احتیاطی تدابیر سے اس پر قابو پایا جا سکتا ہے، اس وقت سیاست نہیں متحد ہو کر کورونا سے لڑنے کی ضرورت ہے۔ چودھری پرویزالٰہی نے کہا کہ وفاقی اور صوبائی حکومتوں کی جانب سے کورونا کی روک تھام کیلئے ضروری اقدامات کے ساتھ ساتھ عوام میں بھرپور آگاہی مہم کی ضرورت ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں