کروناوائرس کاخوف،سرکاری دفاتربندکاروبارزندگی مفلوج پاکستانی شہری فاقں میں آگئے

بہاولپور(ایم اقبال انجم ڈویثرنل بیوروچیف نوائے جنگ ) کروناوائرس کے خدشات کے باعث کاروباری زندگی مفلوج سرکاری دفاتر سے سائلین غائب افسران اورماتحت عملہ چھٹیوں پرچلے گئے مزدورطبقہ بے روزگارگھروں میں فاقے ہرشہری خوفزدہ ہونے لگاتفصیل کے مطابق حکومت پاکستان کی ہدایات پرکروناوائرس کے حملے کے خدشات کے پیش نظرممکنہ اقدامات کیے جارہے ہیں جس کے باعث بازاروں مارکیٹوں سے رش ختم کرنے کے علاوہ سرکاری دفاترسے بھی سٹاف کم کرنے کی ہدایات جاری کی گئی ہیں جس سے کاروباری زندگی بالکل مفلوج ہوکررہ گئی ہے مزدورطبقہ انتہائی پریشان ہے لوگوں نے ترقیاتی اورذاتی تعمیرومرمت کے کام بھی بندکرادیئے ہیں دکانداروں کے پاس گاہک نہیں ہے سرکاری دفاترمیں پنجاب حکومت کی طرف سے دی جانیوالی رعایت کے پیش نظرسرکاری ملازمین نے نزلہ زکام کابہانہ کرکے دفاترسے چھٹیاں کرلی ہیں اورسائلین بھی اپنے کام کاج کے سلسلہ میں سرکاری دفاترمیں آنے سے قاصرہیں جس سے ہرطرف ہوکاعالم ہے اورشہری ایک دوسرے سے خوف کھارہے ہیں اورسوشل میڈیاپرملنے والی جھوٹی افواہوں کی وجہ سے شہری ذہنی مریض بنتے جارہے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں