بھارتی نیول چیف کی اپنی ناکامی کو چھپانے کے لیے پاکستان کے خلاف ہرزہ سرائی

نئی دلی: بھارتی بحریہ کے سربراہ ایڈمرل سنیل لامبا نے اپنی فورس کی ناکامی کو چھپانے کے لیے پاکستان کے خلاف زہر اگلنا شروع کردیا۔

بھارتی نیول چیف سنیل لامبا نے برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کو دیئے گئے انٹرویو میں دس برس قبل ہونے والے ممبئی حملوں میں بھارتی فورسز کی ناکامی اور خراب کارکردگی کو تسلیم کرلیا ہے۔

ایڈمرل سنیل لامبا نے کہا کہ بھارتی بحریہ ناکافی استعداد کے باعث دہشت گردوں کو سمندری حدود میں داخل ہونے سے روکنے میں ناکام ہوگئی تھی تاہم اب بھارت سمندری حدود کی سیکیورٹی کے حوالے سے کافی ترقی کرچکا ہے۔
بھارتی نیول چیف سنیل لامبا نے حکومت کی ناکامی پر پردہ ڈالنے کے لیے الزام ترشی کی تمام حدوں کو پار کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان میں دہشت گردوں کو تربیت دی جاتی ہے اور وہاں اب بھی محفوظ پناہ گاہیں موجود ہیں۔

ایڈمرل سنیل لامبا نے مزید کہا کہ 26 نومبر 2008 میں ممبئی حملوں کے بعد سخت تنقید کا سامنا تھا، جس پر سمندری سرحدوں کو محفوظ بنانے کے لیے بڑے اقدامات کا فیصلہ بھی کیا گیا تھا تاہم اُن میں سے کئی تجاویز پر اب تک عمل نہیں کیا جا سکا ہے۔

بھارتی بحریہ کے سربراہ نے کہا کہ سمندری حدود کی سیکیورٹی کو یقینی بنانے کے لیے ساحلوں کے لیے ارد گرد ایک ریڈار زنجیر بنائی گئی ہے تاہم اس نظام سے چھوٹی کشتیوں کا پتہ نہیں چلایا جا سکتا ہے جس کے لیے 6 جوہری آبدوزوں کی تیاری کی منظوری حاصل کرلی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں