کاغذات نامزدگی میں حقائق چھپانے پر وزیراعظم عمران خان سے جواب طلب

پشاور: ہائی کورٹ نے عام انتخابات میں قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 35 سے جمع کرائے گئے کاغذات نامزدگی میں حقائق چھپانے کے معاملے پر وزیراعظم عمران خان کو نوٹس جاری کردیا۔

پشاور ہائیکورٹ کے جسٹس اکرام اللہ خان اور جسٹس اشتیاق ابراہیم پر مشتمل دو رکنی بنچ نے قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 35 سے پاکستان جسٹس ڈیموکریٹک پارٹی کے امیدوار انعام اللہ خان کی درخواست پر کیس کی سماعت کی۔

درخواست گزار کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ وزیراعظم عمران خان نے بنوں سے حلقہ این اے 35 کے لئے جو کاغذات نامزدگی جمع کرائے، ان میں غلط بیانی کی ہے اور کاغذات نامزدگی میں اپنی بیٹی ٹیریان وائٹ کا ذکر نہیں کیا، وہ صادق اور امین نہیں رہے، وہ آرٹیکل 62 اور 63 پر پورا نہیں اترتے، حقائق چھپانے پرعدالت عمران خان کو نا اہل قرار دے۔
عمران خان کی جانب سے ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل رب نواز پیش ہوئے، ابتدائی دلائل کے بعد عدالت نے عمران خان کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کرلیا، عدالت نے کیس کی سماعت 13 دسمبرتک ملتوی کردی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں