حیدرآباد میں سرکاری ڈرائیور راتوں رات کروڑ پتی بن گیا

حیدر آباد: سرکاری ڈرائیور پردیپ کمار نے اکاؤنٹ سے رقم نکلوائی تو اس کے اکاؤنٹ میں 5 کروڑ روپے کی موجودگی کا انکشاف ہوا۔

کراچی میں فالودہ بیچنے والے شخص کے اربوں پتی بننے کے بعد اب حیدرآباد کے ایک سرکاری ڈرائیور کے کروڑ پتی بننے کا انکشاف ہوا ہے۔

کنٹونمنٹ بورڈ کے ڈرائیور پردیپ کمار کا کہنا ہے کہ اس کے اکاؤنٹ میں صرف 18 ہزار روپے موجود تھے اور جب میں نے اے ٹی ایم سے رقم نکلوائی تواے ٹی ایم سلپ پر بھاری بھرکم بیلنس دیکھ کر پریشان ہوگیا، سلپ کے مطابق میرے اکاؤنٹ میں 4 کروڑ 99 لاکھ روپے کی رقم مزید موجود تھی۔

پردیپ کے مطابق میں معمولی سا ڈرائیور ہوں اور اتنی بڑی رقم دیکھ کر ہواس کھو بیٹھا ہوں، تاہم کسی بھی کارروائی سے بچنے کے لئے اکاؤنٹ میں رقم کی موجودگی سے متعلق بینک عملے کو آگاہ کردیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں