سیاست ومعیشت کودین کے مطابق ڈھالنے کی ضرورت ہے، خطبہ حج

عرفات: مسجد نبویؐ کے امام شیخ حسین بن عبدالعزیز ال الشیخ نے خطبہ حج دیتے ہوئے کہا ہے کہ اسلام کی اصل تصویر احسن اعمال پرہے جب کہ سیاست اور معیشت کودین کے مطابق ڈھالنے کی ضرورت ہے۔

مسجد نبویؐ کے امام شیخ حسین بن عبدالعزیزال الشیخ نے مسجد نمرہ میں خطبہ حج دیتے ہوئے کہا کہ مسلمانوں کو حکمرانوں کی فرمانبرداری اوراطاعت کا حکم دیا گیا ہے، حکمران ایسا ہونا چاہیے کہ اللہ کی اطاعت کرے اورہرطرح کی برائی کو روکے، حکمرانی ایسی ہو جس میں الله اور اس کے رسول ﷺ کے احکامات کی پیروی کی جائے، شریعت کے مطابق زندگی بسر کی جائے، اللہ کا حکم ہے فیصلہ سازی عدل کی بنیاد پر کی جائے، سیاست اور معیشت کو دین کے مطابق ڈھالنے کی ضرورت ہے۔

خطبہ حج میں کہا گیا کہ مسلمان کا مال، خون اورعزت دوسرے مسلمان پر حرام ہے، اسلام ظلم و زیادتی کو پسند نہیں کرتا، مسلمان کو چاہیے کہ کسی کے ساتھ زیادتی نہ کرے، نبی پاک ﷺ کی پیش کردہ اخلاقیات کسی بھی بے گناہ کو نقصان پہنچانے سے روکتی ہیں، معاشرے کے امن کیلیے ہرمسلمان کو کوشش کرنی چاہیے، اخلاق حسنہ معاشرے کو کامیابی کی طرف لے جاتا ہے، پوری دنیا کو قرآن پاک کے مطالعے کی دعوت دیتے ہیں، قرآن سیدھے راستے کی طرف لے کر جاتا ہے۔
شیخ حسین بن عبدالعزیز ال الشیخ نے کہا کہ محمد مصطفیٰ ﷺ پرایمان کامل اوراحکامات کو برحق ماننا ایمان کا اہم جزو ہے، فجرمیں قرآن کی تلاوت روز آخرت میں گواہی دے گی، اسلام کی اصل تصویراحسن اعمال پرہے، اللہ نے وحدانیت پر یقین رکھنے والوں سے کامیابی کا وعدہ کیا ہے، ہرطرح کی کامیابی الله کی وحدانیت اوررسول الله کی رسالت میں ہے، اللہ تقوی اختیارکرنے والوں کو پسند کرتا ہے، لوگوں تقوی اختیارکرو تاکہ تم فلاح پاؤ، اسلام اوردین کی عظمت کی بنیاد توحید ہے، اللہ سے ڈرو اور کسی کو اس کا شریک نہ ٹہراؤ، شرک کرنے والے کا انجام برا ہوگا، الله کا حکم ہے کہ تم مجھ سے محبت کرتے ہو تو رسول الله ﷺ کی اطاعت کرو۔

خطبہ حج میں کہا گیا کہ الله توبہ کرنے والوں کو پسند کرتا ہے، والدین اورپڑوسیوں کے ساتھ احسن سلوک کیا کرو، دھوکا نہ دو اورناپ تول پورا کرو، جوا اورسٹے بازی حرام ہے، اللہ نے جاسوسی اور غیبت سے منع فرمایا ہے، وقت پر نماز ادا کرو، اسلام ایک دوسرے کے ساتھ اچھے طریقے سے ہم کلام ہونے کی تعلیمات دیتا ہے، اسلامی معاشرہ باہمی محبت کی تعلیمات دیتا ہے اور سیدھا رستہ دکھاتا ہے، الله کا حکم ہے کہ وعدہ پورا کیا جائے، اسلام ہمیں برائی اور فحاشی سے منع کرتا ہے، رسول پاک ﷺنے اپنے خطبہ عرفہ میں حسن اخلاق پر زور دیا ہے، خواتین اور بیویوں کے ساتھ بھلائی کا معاملہ کرنے کی ہدایت کی گئی ہے، نماز کلمے کے بعد اسلام کا اہم ترین رکن ہے، اللہ غرور اور تکبر کرنے والے کو پسند نہیں کرتا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں