حقیقت سے لاعلم ممالک میں بھارت دنیا کے 5 بڑے ملکوں میں شامل

لندن: حقیقت سے لاعلم ممالک کی فہرست میں بھارت دنیا کے پانچ بڑے ممالک میں شامل ہوگیا۔

اپنے ملک میں زندگی کے مختلف پہلوؤں، سماجی و معاشی مسائل سے وہاں کی عوام کتنی واقف ہے ،اس حوالے سے ہونے والے ایک سروے میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ بھارت کا شمار ان ممالک میں ہوتا ہے جہاں کے عوام کسی بھی معاملے پر حقیقت کے برعکس غلط تصورات رکھتے ہیں۔

آئی پوس موری کے تحت ہونے والے ایک آن لائن سروے میں 38 ممالک کے قریباً 30 ہزار لوگوں سے ان کے ممالک سے متعلق چند سوالات کیے گئے جس میں صحت،تعلیم ،امن و امان اور دہشتگردی سمیت دیگر موضوعات شامل تھے۔
آن لائن پینل سسٹم کے 2017 کے سروے میں اصل زمینی حقائق کے برعکس جواب دینے والے ممالک کی درجہ بندی کی گئی جس میں جنوبی افریقا کو دنیا کا سب سے لاعلم ملک قرار دیا گیا جب کہ برازیل دوسرے،فلپائن تیسرے،پیرو چوتھے اور بھارت پانچویں نمبر ہے۔

سروے کے مطابق بھارتیوں نے رائے دی کہ 13 سال سے زائد عمر کے 64 فیصد لوگ فیس بک استعمال کرتے ہیں جب کہ حقیقت میں یہ تعداد صرف 8 فیصد ہے۔

صحت سے متعلق سوال پر بھارتیوں کا خیال ہے کہ ہر دوسرا شخص ذیابیطس میں مبتلا ہے تاہم اصل میں صرف 9 فیصد افراد شوگر کے مرض کا شکار ہیں۔

اسی طرح 44 فیصد بھارتیوں کا کہنا ہے کہ کچھ ویکسینز صحت مند بچوں کو آٹیزم (خود محوری)میں مبتلا کررہی ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں