جنگی جنون میں مبتلا بھارت اسرائیل سے ٹینک شکن اسپائیک میزائل خریدے گا

نئی دہلی: بھارت نے اپنی اینٹی ٹینک استعداد کو بڑھانے کے لیے اسرائیل سے اسپائیک میزائل خریدنے کے لیے رضامندی ظاہر کردی ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق مودی حکومت نے اسرائیل سے جنگی ٹینک پر حملہ کرنے والے اسپائیک میزائل کی خریداری میں دوبارہ دلچسپی ظاہر کردی ہے جس کے لیے اسرائیل سے 2014 میں مسترد کیے گئے معاہدے کو ایک بار پھر بحال کیا جائے گا۔ اس سے قبل بھارت نے 2017 میں ڈیفنس رسرچ اینڈ ڈویلپمنٹ آرگنائزیشن (DRDO) کی طرف سے اس طرح کے میزائل بھارت میں ہی تیار کرنے کے اعلان کے بعد اسرائیل سے دفاعی معاہدے کو منسوخ کردیا تھا۔

بھارت یہ میزائل رافیل ایڈوانسڈ ڈیفنس سسٹم سے خریدے گا جس کے لیے بھارت کا اعلیٰ سطح کا وفد جلد اسرائیل کا دورہ کرے گا۔ تاہم اب تک اس ڈیل سے متعلق میڈیا کو آگاہ نہیں کیا گیا ہے دوسری جانب اسرائیلی حکام کا کہنا ہے دونوں ممالک کے درمیان دفاعی نظام کے حوالے سے مذاکرات جاری ہیں لیکن اس کی نوعیت کے حوالے سے کچھ نہیں کہا جاسکتا ہے۔
واضح رہے کہ اسرائیل کے وزیراعظم نیتن یاہو نے رواں سال جنوری میں بھارت کا 6 روزہ دورہ کیا تھا جس میں بھارتی وزیراعظم کے ساتھ ہونے والی ملاقات میں باہمی دفاعی تعاون کے حوالے سے اہم فیصلے کیے گئے تھے۔ بھارت کا اینٹی ٹینک میزائل کی خریداری کا معاملہ بھی اسی دوران طے پایا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں