بھارت میں کرپشن کیخلاف آواز اٹھانے والے 5 سادھوؤں کو وزیر مملکت کا درجہ دیدیا گیا

نئی دہلی: ریاست مدھیہ پردیش حکومت نے ’کمپیوٹر بابا‘ کہلانے والے سادھو سمیت 5 افراد کو وزیر مملکت کا درجہ دینے کا اعلان کردیا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق بھارتی ریاست مدھیہ پردیش کی حکومتی جماعت بھارتی جتنا پارٹی نے ریاست میں پہلی بار 5 سادھوؤں کو وزیرِ مملکت کا درجہ دینے کا اعلان کردیا۔

صوبائی حکومت کے نوٹی فکیشن میں بتایا گیا ہے کہ ریاست کے مختلف علاقوں خصوصاً نرمدا ندی کے کنارے شجر کاری، آبی تحفظ اور صفائی ستھرائی کے امور پر عوام میں بیداری مہم چلانے کے لیے ایک کمیٹی قائم کی گئی ہے جس میں 5 خصوصی اراکین نرمدا نند مہاراج، ہری ہرا نند مہاراج، بھیو مہاراج، کمپیوٹر بابا اور یوگیندر مہنت کو شامل کیا گیا ہے اور انہیں وزرائے مملکت کا درجہ دے دیا گیا ہے۔
حکومت کے اس اقدام پر اپوزیشن جماعتوں اور بالخصوص کانگریس پارٹی نے شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت نے اپنی کرپشن کو چھپانے کے لیے مذہبی رہنماؤں کا منہ بند کرنے اور رواں برس کے اواخر میں ہونے والے ریاستی اسمبلی کے انتخابات میں سیاسی فائدہ اٹھانے کے لیے یہ قدم اٹھایا ہے۔

کانگریس رہنماؤں کے مطابق وزرائے مملکت کا درجہ پانے والے پانچوں سادھوؤں نے وزیراعلیٰ شیوراج سنگھ چوہان کے بعض منفی اقدامات کے خلاف آواز اٹھائی تھی جب کہ ’کمپیوٹر بابا‘ کی قیادت میں یکم اپریل سے 15 مئی تک صوبے کے 45 اضلاع میں نرمدا ندی کے کنارے شجرکاری کے نام پر بڑے پیمانے پر ہونے والی مبینہ بدعنوانی کے خلاف ’ نرمدا گھپلہ رتھ یاترا‘ نکالنے کا اعلان کیا تھا۔

گزشتہ ہفتے ایک اجلاس میں فیصلہ کیا گیا تھا کہ صوبے کے 45 اضلاع میں ساڑھے 6 کروڑ پودوں کی گنتی کرائی جائے جنہیں لگانے کے لیے وزیراعلیٰ شیوراج سنگھ نے دعویٰ کیا تھا کہ اس مہم کو ورلڈ ریکارڈ کے طور پر درج کرایا جائے گا لیکن 10 ماہ گزر جانے کے باوجود بھی ایسا نہ ہوسکا۔

دوسری جانب اپوزیشن جماعتوں اور کانگریس رہنماؤں کے بیانات سچ ثابت ہوگئے ہیں اور اب ان سادھوؤں نے وزارتیں حاصل کرنے کے بعد مجوزہ یاترا منسوخ کردی ہے۔ کمپیوٹر بابا‘ نے وزیر کا درجہ ملنے کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے یہ یاترا منسوخ کر دی ہے کیوں کہ صوبائی حکومت نے نرمدا ندی کے تحفظ کے لیے سادھو سنتوں کی ایک کمیٹی بنانے کا ہمارا مطالبہ پورا کر دیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں